جمائی میڈیکل سائنس اور اسلام کی نظر میں۔۔۔!

جمائی ایک اضطراری کفیت ہے جو انسان پر عام طور پر سونے سے پہلے ، سو کر اُٹھنے کے بعد، اکتاہت، تھکاوٹ وغیرہ کے دوران طاری ہوتی ہے لیکن جمائی لینے کا آغاز بچہ ماں کے پیٹ سے ہی شروع کر دیتا ہے یعنی یہ ایک ایسی کفیت ہے جو انسان فطرت سے لیکر آتا ہے۔
ہم میڈیکل سائنس کی رُو سے جانیں گے کہ ہم جمائی کیوں لیتے ہیں اور اسکا کیا مقصد ہے اور ساتھ ہی ساتھ یہ بھی جانیں گے کہ اسلام جمائی کے بارے میں کیا کہتا ہے۔
بہت سی احادیث میں جمائی کے متعلق اللہ کے نبی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کے فرمان ملتے ہیں جس میں جمائی کے دوران منہ پر ہاتھ رکھنے کی تلقین کی گئی ہے اور بعض جگہ ارشاد ملتا ہے کہ اسے روکو، جمائی کے دوران منہ پر ہاتھ رکھنا بہت ضروری ہے کیونکہ جمائی ایک آدمی سے دُوسرے کو فوراً لگتی ہے بلکہ یہ انسان سے جانوروں خاص طور پر کُے، بلی، پرندے، سانپ اور بندروں میں پھیلتی ہے اور اسی طرح جانوروں سے انسانوں میں بھی پھیلتی ہے۔
ایک تحقیق کے مطابق جمائی قریبی دوست اور رشتے داروں میں زیادہ تیزی سے پھیلتی ہے اور اگر آپ کسی ایسی جگہ جہاں آپ کا قریبی عزیز بھی موجود ہو جمائی لیں گے تو دوسروں کی نسبت قریبی عزیز کے جمائی لینے کے چانسز زیادہ ہوں گے۔
میڈیکل سائنس نے جمائی پر بہت سی تحقیات کی ہیں جس میں انسانوں اور جانوروں کی جمائی لینے کی ایک سے زائد وجوہات نوٹ کی گئی ہیں۔
کاربن ڈائی آکسائیڈ کی مقدار کا بڑھنا:
ایک تحقیق کے مطابق جمائیاں آنے کی ایک وجہ خون میں کاربن ڈائی آکسائیڈ کی مقدار کا بڑھنا ہے اور جب یہ مقدار بڑھتی ہے تو خون کو آکسیجن کی ضرورت پڑتی ہے لیکن یہ بھی ایک حقیقت ہے کے جمائی کے دوران آکسیجن کی اتنی مقدار جسم میں داخل نہیں ہوتی جتنی عام سانس لینے کے دوران داخل ہوتی ہے۔
جانوروں کی جمائی دوسروں کے لیے پیغام:
ایک تحقیق کے نتائج کے مطابق جب کوئی جانور تھکاوٹ یا بوریت کے باعث جمائی لیتا ہے تو یہ گروپ کے دوسرے جانوروں کے لیے ایک پیغام ہوتا ہے کے باخبر رہیں اور حالات پر نظر رکھیں ۔
نروس ہونا بھی جمائی پیدا کرتا ہے:
نروس ہونے کے بعد انسان کا جسم فوری ایکشن کے لیے تیار ہوتا ہے اور ایک تحقیق کے مُطابق ایسے موقع پر جمائی لینے سے جسم جلدی الرٹ ہوجاتا ہے، تحقیق کے دوران یہ بات بھی نوٹ کی گئی کے جہاز سے پیرا شوٹ کے ذریعے چھلانگ لگانے والے افراد اکثر چھلانگ لگانے سے پہلے جمائی لیتے ہیں اور اتھلیٹ حضرات بھی کھیل سے پہلے جمائی لیتے ہیں اور یہ جمائی اُن کو چاک و چوبند کرتی ہے۔
جمائی اوردماغ کا درجہ حرارت:
ایک تحقیق کے مُطابق دماغ کا درجہ حرارت اگر بڑھ جائے تو بھی جمائی پیدا ہوتی ہے اور دماغ کو ٹھنڈا کرنے کا باعث بنتی ہے۔ایسا عام طور پر اُس وقت بھی ہوتا ہے جب آپ دماغ سے کوئی ایسا کام لے رہے ہوں جس میں آپ کا دل نہ لگ رہا ہو تو دماغ کو ایسا کام کرنے کے دوران زیادہ مشقت کرنی پڑتی ہے جس سے اُس کا درجہ حرارت زیادہ بڑھتا ہے جسے کم کرنے کے لیے جمائیاں آنی شروع ہو جاتی ہیں۔
جمائی بڑے دماغ کی نشانی:
ایک تحقیق کے مُطابق اگر انسان کے دماغ کا حجم بڑا ہے اور اُس میں عام دماغ کی نسبت زیادہ برین سیلز موجود ہیں تو ایسے افراد بھی بہت جلد جمائیاں لینی شروع کر دیتے ہیں کیونکہ زیادہ برین سیلز کی وجہ سے اُن کا دماغ زیادہ حرارت پیدا کرتا ہے جسے ٹھنڈا کرنے کے لیے جمائیوں کا آغاز ہو جاتا ہے۔
بیماری کی وجہ سےجمائی:
بہت زیادہ جمائیاں آنے کی ایک وجہ میڈیکل سائنس کے مطابق یہ بھی ہوسکتی ہے کہ آپ کا دل ٹھیک کام نہیں کر رہا اور ہارٹ اٹیک یا فالج کا خطرہ ہے اور اس کی ایک وجہ دماغ میں ٹیومر کا ہونا بھی ہوسکتا ہے۔

بارش کے بعد ہوا ميں پانی کے تیرتے ہوئے ننھے ننھے کروی (گیند نما Spherical) قطروں پر جب سورج کی سفید روشنی پڑتی ہے تو سات رنگوں میں بکھر جاتی ہے جسے دھنک یا۔۔۔ مزید پڑھیں

آج ہم وٹامن ای کے ان حیران کن فوائد اوراستعمالات کے بارے میں بتائیں گے، جن کے بارے میں آپ نے کبھی بھی نہیں سناہوگا۔وٹامن ای کومختلف اشیاے کے ساتھ۔۔۔ مزید پڑھیں

ملک و ملت کا نام روشن کرنے والوں کا نام روشن رکھنا زندہ قوموں کا شیوہ رہا ہے۔ ہم بحیثیتِ پاکستانی اپنے فرزندِ ملت ڈاکٹر عبدالسلام کی کاوشوں کو سراہتے ہیں۔۔۔ مزید پڑھیں

کچھ کھانے ایسے ہیں جنہیں دوسرے کھانوں میں شامل کر کے کھایا جائے تو وہ ہمارے نظام انہظام پر اچھے اثرات مرتب نہیں کرتے اور بعض دفعہ ہمیں بیمار بھی کر دیتے ہیں۔۔۔ مزید پڑھیں

دنیا میں چند عمارات ایسی بھی ہیں جن کی تعمیر پر ایک شاہانہ بجٹ خرچ کیا گیا ہے جس کے ساتھ ہی انہیں دنیا کی مہنگی ترین عمارات ہونے کا اعزاز حاصل ہوچکا ہے۔۔۔ مزید پڑھیں

ایک دن نائی نے بادشاہ سے عرض کیا،حضور آپ وزیر کی جگہ مجھے وزیر کیوں نہیں بنا دیتے۔ بادشاہ نے مسکرا کر حجام کی طرف دیکھا اور اس سے کہا،ٹھیک ہے لیکن پہلے تم۔۔۔ مزید پڑھیں

یہ تاریخ کا پہلا واقعہ تھا کہ کسی ہندو کی چتا کو آگ نہ لگنے کی وجہ سے شمشان گھاٹ میں ہی دفنا دیا گیا ۔ایک ہندو احترام قران میں اس دنیا کی آگ سے محفوظ رہا ہم اس کتاب پر۔۔۔ مزید پڑھیں

یہ ایک مفلس غریب الوطن کے عزم و ہمت کی انوکھی داستان ہے جو ثابت کرتی ہے کہ آپ ڈٹے رہیں، محنت کرتے رہیں تو بالآخر کامیابی آپ کے قدم چومتی ہے۔۔۔ مزید پڑھیں

برہنہ حالت میں کبھی خود کو آئینے میں مت دیکھیں کیونکہ اس طرح جن آپ پر عاشق ہو سکتے ہیں اور آپ کے ساتھ تعلق کی کوشش کر سکتے ہیں۔ ایسی صورت میں اور کوئی بھی ۔۔۔ مزید پڑھیں

جوزف سوان اور تھامس ایڈیسن نے 1870 کی دہائی میں بجلی کا بلب بنایا۔ اس سے چند برس بعد ایڈیسن نے بجلی بنانے کے سٹیشن نیویارک میں پرل سٹریٹ اور لندن میں ۔۔۔ مزید پڑھیں

انسان نے سونا 8,000 سال قبل دریافت کر لیا تھا۔ 750 سال قبل از مسیح تک یعنی سونے کی دریافت کے سوا پانچ ہزار سال بعد تک انسان صرف سات دھاتوں سے واقف تھا ۔۔۔ مزید پڑھیں

سورہ کہف کی تلاوت فتنے دجال سے نجات کا باعث ہے ۔ خروج دجال قیامت کی بڑی نشانیوں میں سے ایک ہے اور فتنہ دجال زمانے کے شروفتن میں سب سے بڑا فتنہ ہے مکہ مکرمہ۔۔۔ مزید پڑھیں