دنیا کےخفیہ مقامات جو گوگل نقشےپرنہیں دکھاتا

گوگل کے نقشے پر پوری دنیا کی تصاویر موجود ہیں لیکن بعض ایسی جگہیں ہیں جنہیں گوگل چھپا کر رکھتا ہے۔ ان جگہوں میں زیادہ تر فوجی تنصیبات کے علاقے شامل ہیں، تاہم کئی دیگر مقامات بھی چھپا کر رکھے جاتے ہیں۔ ان کی تفصیل درج ذیل ہے۔
پراسرار روسی مقام:(نام جلد درست کر دیا جائے گا)
پراسرار روسی مقام سائبیریا میں ایگویکینوت شہر کے قریب واقع ہے۔ اس کے متعلق بتایا جاتا ہے کہ مبینہ طور پر یہ مقام سرد جنگ کے زمانے میں ایٹمی ہتھیاروں کی تیاری کے لیے استعمال کیا جاتا تھا۔
وولکر ایئربیس نیدرلینڈز:
اس جگہ کے متعلق سابق ویزراعظم روڈ لوبرز اعتراف کر چکے ہیں کہ یہاں امریکہ کے 20سے زائد ایٹم بم رکھے گئے ہیں۔ یہ ایک فوجی اڈا ہے جس میں بنکرز بنے ہوئے ہیں اور ان بنکرز میں ایٹم بم رکھے ہوئے ہیں۔ یہ بی 61تھرمونیوکلیئر بم ہیں جو سردجنگ کے زمانے میں استعمال کرنے کے لیے امریکہ نے یہاں پہنچائے تھے۔ یہ ہیروشیما اور ناگاساکی پر گرائے گئے ایٹم بموں سے 4گنا زیادہ طاقتور ہیں۔
بیکر جھیل، کینیڈا:
اس جگہ پر ایک روشنی کا مینار ہے جو خلاء میں سفر کے دوران نیوی گیشن کے لیے بنایا گیا ہے۔ ڈاکٹر رچرڈ بوائیلن کے مطابق یہ سیاہ رنگ کے تکونی مینار نما ایک ڈیوائس ہے جو ہماری گلیکسی کے ستاروں کے درمیان سفر کے لیے استعمال ہوتی ہے۔
کرنل سینڈرز، کے ایف سی:
باقی مقامات تو حساس ہیں چنانچہ ان کے چھپانے کی وجہ سمجھ آتی ہے لیکن یہ حیران کن امر ہے کہ دنیا بھر میں کے ایف سی کی برانچز پر لگی کے ایف سی کے بانی کی تصاویر میں ان کا چہرہ بھی گوگل نے چھپا رکھا ہے۔ کے ایف سی کی دنیا بھر میں 19ہزار برانچز ہیں۔اس حوالے سے گوگل کا کہنا ہے کہ ’کے ایف سی کے بانی کا چہرہ اس لیے چھپایا جاتا ہے کیونکہ وہ حقیقی شخص ہیں اور کسی بھی حقیقی شخص کی شناخت گوگل کے نقشے پر ظاہر نہیں کی جاتی۔
‘‘بائبلون، عراق:
گوگل نے اپنے نقشے پر عراق کے قدیم ترین شہر بائبلون کو بھی چھپا رکھا ہے۔
یہ شہر ایک وقت میں دنیا کے 7عجوبوں میں شمار کیا جاتا تھا۔
نارتھ سی نٹینل آئی لینڈ:
یہ ایک پراسرار جزیرہ ہے جس کا باقی دنیا سے کوئی رابطہ نہیں اور گوگل نے بھی اسے اپنے نقشے پر چھپا رکھا ہے۔ اس جزیرے پر رہنے والے انسان بیرونی دنیا کے انسانوں سے کوئی رابطہ نہیں رکھتے۔ جو بھی وہاں جانے کی کوشش کرتا ہے یہ لوگ اس پر تیروں سے حملہ کر دیتے ہیں۔ ایک بار ہیلی کاپٹر کے ذریعے کچھ لوگوں نے وہاں اترنے کی کوشش کی تو انہوں نے ہیلی کاپٹر پر بھی حملہ کر دیا۔
یہ جزیرہ بھارت کی حدود میں آتا ہے اور کئی لوگوں کے قتل ہونے کے بعد اب بھارتی حکومت نے اس جزیرے کے گرد تین میل کا علاقہ ممنوعہ قرار دے رکھا ہے تاکہ آئندہ کوئی شخص اس جزیرے پر بسنے والے خونخوار قبیلے کے ہاتھوں قتل نہ ہو۔
مارکولے نیوکلیئر سائٹ، فرانس:
فرانس کی ایٹامک انرجی سائٹ تھی جہاں 2011ء میں ایک دھماکہ ہوا تھا اور ایک شخص جاں بحق جبکہ چار زخمی ہو گئے تھے۔ اس سائٹ کو 1984ء سے بند کیا جا چکا ہے تاہم آج بھی اس جگہ پر لوگوں کو جانے کی اجازت نہیں ہے۔
بشکریہ: قدرت ویب ڈیسک
بارش کے بعد ہوا ميں پانی کے تیرتے ہوئے ننھے ننھے کروی (گیند نما Spherical) قطروں پر جب سورج کی سفید روشنی پڑتی ہے تو سات رنگوں میں بکھر جاتی ہے جسے دھنک یا۔۔۔ مزید پڑھیں

آج ہم وٹامن ای کے ان حیران کن فوائد اوراستعمالات کے بارے میں بتائیں گے، جن کے بارے میں آپ نے کبھی بھی نہیں سناہوگا۔وٹامن ای کومختلف اشیاے کے ساتھ۔۔۔ مزید پڑھیں

ملک و ملت کا نام روشن کرنے والوں کا نام روشن رکھنا زندہ قوموں کا شیوہ رہا ہے۔ ہم بحیثیتِ پاکستانی اپنے فرزندِ ملت ڈاکٹر عبدالسلام کی کاوشوں کو سراہتے ہیں۔۔۔ مزید پڑھیں

کچھ کھانے ایسے ہیں جنہیں دوسرے کھانوں میں شامل کر کے کھایا جائے تو وہ ہمارے نظام انہظام پر اچھے اثرات مرتب نہیں کرتے اور بعض دفعہ ہمیں بیمار بھی کر دیتے ہیں۔۔۔ مزید پڑھیں

دنیا میں چند عمارات ایسی بھی ہیں جن کی تعمیر پر ایک شاہانہ بجٹ خرچ کیا گیا ہے جس کے ساتھ ہی انہیں دنیا کی مہنگی ترین عمارات ہونے کا اعزاز حاصل ہوچکا ہے۔۔۔ مزید پڑھیں

ایک دن نائی نے بادشاہ سے عرض کیا،حضور آپ وزیر کی جگہ مجھے وزیر کیوں نہیں بنا دیتے۔ بادشاہ نے مسکرا کر حجام کی طرف دیکھا اور اس سے کہا،ٹھیک ہے لیکن پہلے تم۔۔۔ مزید پڑھیں

یہ تاریخ کا پہلا واقعہ تھا کہ کسی ہندو کی چتا کو آگ نہ لگنے کی وجہ سے شمشان گھاٹ میں ہی دفنا دیا گیا ۔ایک ہندو احترام قران میں اس دنیا کی آگ سے محفوظ رہا ہم اس کتاب پر۔۔۔ مزید پڑھیں

یہ ایک مفلس غریب الوطن کے عزم و ہمت کی انوکھی داستان ہے جو ثابت کرتی ہے کہ آپ ڈٹے رہیں، محنت کرتے رہیں تو بالآخر کامیابی آپ کے قدم چومتی ہے۔۔۔ مزید پڑھیں

برہنہ حالت میں کبھی خود کو آئینے میں مت دیکھیں کیونکہ اس طرح جن آپ پر عاشق ہو سکتے ہیں اور آپ کے ساتھ تعلق کی کوشش کر سکتے ہیں۔ ایسی صورت میں اور کوئی بھی ۔۔۔ مزید پڑھیں

جوزف سوان اور تھامس ایڈیسن نے 1870 کی دہائی میں بجلی کا بلب بنایا۔ اس سے چند برس بعد ایڈیسن نے بجلی بنانے کے سٹیشن نیویارک میں پرل سٹریٹ اور لندن میں ۔۔۔ مزید پڑھیں

انسان نے سونا 8,000 سال قبل دریافت کر لیا تھا۔ 750 سال قبل از مسیح تک یعنی سونے کی دریافت کے سوا پانچ ہزار سال بعد تک انسان صرف سات دھاتوں سے واقف تھا ۔۔۔ مزید پڑھیں

سورہ کہف کی تلاوت فتنے دجال سے نجات کا باعث ہے ۔ خروج دجال قیامت کی بڑی نشانیوں میں سے ایک ہے اور فتنہ دجال زمانے کے شروفتن میں سب سے بڑا فتنہ ہے مکہ مکرمہ۔۔۔ مزید پڑھیں