رن مریدی : ایک دلچسپ تحقیق۔ضرورپڑھیں

پاکستان میں شادی کے بعد عام طور پر شوہروں کو گھر والوں سے رن مریدی کا طعنہ سُننا ہی پڑتا ہے اور یہ طعنہ اُسے مختلف رشتے اس تسلسل سے دیتے ہیں کہ ایک وقت ایسا آ جاتا ہے کہ اُسے یقین ہوجاتا ہے کہ وہ بیوی کے نیچے لگا ہوا ہے اور بیوی اُسے کنٹرول کر رہی ہے، ایسے موقع پر اُسکے سمجھدار دوست جو خود بیوی کے نیچے لگے ہوئے ہوتے ہیں اُسے یہی مشورہ دیتے ہیں کہ ” ہیپی وائف تو ہیپی لائف” اس لیے خاموشی سے نیچے ہی لگے رہو۔
اس آرٹیکل میں ہم ایک ایسی تحقیق کو شامل کر رہے ہیں جس کے نتائج کے مطابق وہ شوہر جو رن مریدی کی بجائے بیوی کو اپنے حکم کے طابع رکھتے ہیں زیادہ صحت مند اور لمبی زندگی جیتے ہیں۔
رن مریدی عام طور پر ایسے جوانوں کو ورثے میں ملتی ہے جو اپنی پسند کی شادی کر بیٹھتے ہیں اور ایسے موقع پر اگر وہ ڈھیٹ نہ ہوں تو بہت جلد بیوی کے نخرے اور گھر والوں کے طعنےانہیں ڈپریشن، ہائی بلڈ پریشر اور ان دونوں امراض سے جُڑی کئی اور دائمی بیماریوں میں مبتلا کر دیتے ہیں۔
میشی گن سٹیٹ یونیورسٹی کے سوشیالوجی ڈیپارٹمینٹ میں ہونے والی ایک ریسرچ کے مطابق ایسے افراد جن کی پسند کی شادی نہیں ہوتی یا جو اپنی بیوی سے زیادہ خُوش نہیں ہوتے اُن کے ذیابطیس جیسے مرض میں مبتلا ہونے کے چانسز بہت کم ہوتے ہیں اور اگر کبھی وہ اس مرض میں مبتلا ہو جائیں تو عین ممکن ہوتا ہے کہ وہ بہت جلد تھوڑی سی پرہیز سے اس مرض سے نجات حاصل کر لیں گے۔
ماہرین نفسیات کا کہنا ہے کہ ایسا اس لیے ہوسکتا ہےکہ ایسے شوہر حضرات اپنی ذات پرازخود زیادہ توجع دیتے ہیں اور اپنا زیادہ وقت گھر سے باہرگزارنا چاہتے ہیں جہاں وہ اپنے حلقہ احباب میں اپنا وقت ہنسی خُوشی گزارتے ہیں اور ذیابطیس اور ڈپریشن وغیرہ جیسے امراض سے بچے رہتے ہیں۔اس بات کی زندہ مثال آپ کو اپنے اُن رشتے داروں میں نظر آ سکتی ہے جہاں شوہر حضرات سخت گیر قسم کے ابا جی ہوتے ہیں اور گھر کا پتا پتا اُن کی موجودگی میں اماں سمیت کانپتا ہے اور ایسے افراد کے جلال سمیت اُن کی صحت کو کبھی آنچ بھی نہیں آتی۔
میشیگن یونیورسٹی کی تحقیق کے نتائج کے مطابق خواتین کی صحت پر بھی شادی کا بہت گہرا اثر ہوتا ہےاور وہ خواتین جو شوہروں کو اپنے حُکم کے مطابق چلاتی ہیں وہ ایسی خواتین سے جو شوہروں سے ڈرتی ہیں یا شوہروں کے ساتھ اُن کے دوستانہ مراسم ہیں زیادہ صحت مند ہوتی ہیں اور اُن کے ذیابطیس جیسے امراض میں مبتلا ہونے کے چانسز بہت کم ہوتے ہیں۔
ماہرین کے مطابق شوہر سے دوستانہ مراسم پیدا ہونے کے بعد خواتین عام طور پر شوہر کی پریشانیوں پر خود بھی پریشان ہو کر اپنی پریشانیوں میں اضافہ کرتی ہیں ایسے موقع پر یہ پریشانیاں اُن کی صحت پر براہ راست اثر انداز ہوتی ہیں جبکے شوہر پر حکم چلانے والی خواتین عام طور پر اپنے شوہروں کو موقع نہیں دیتیں کے وہ اپنی پریشانیوں کا اظہار کر سکٰیں اور اگر شوہر کبھی ایسا کرتے بھی ہیں تو اُنہیں دوٹوک قسم کا حل بتا کر اپنی جان چُھڑا لیتی ہیں۔کسی رشتے پر حد سے زیادہ توجہ دینا بھی نقصان دہ ہوتا ہے۔
ایک تحقیق کے مطابق ایسے شوہر یا بیویاں جو ایک دوسرے کو حد سے زیادہ کنٹرول کرنے کی کوشش کرتے ہیں اُن کے پارٹنرز کی صحت زیادہ تر خراب رہنا شروع ہو جاتی ہے اور وہ عمر سے پہلے دائمی بیماریوں کا شکار ہوتے ہیں اور وقت سے پہلے مر جاتے ہیں۔
کیا آپ اوپر دی گئی تحقیق کے نتائج سے متفق ہیں اور سمجھتے ہیں کے حد سے زیادہ بڑھنا خطرناک ہوتا ہے اور میانہ روی بہترین زندگی گُزارنے کا آسان حل ہے اور یہ پیغام حد سے بڑھنے والے کسی دوست کو دینا چاہتے ہیں تو اُسے اس تحریر کو پڑھنے کے دعوت دیں۔
نوٹ: یہ تحریر صرف پڑھنے کے لیے ہے۔ اِس پر عمل کرنے کی صورت میں حالات خراب ہونے کا ذمہ دارعمل کنندہ بذا ت خود ہو کا۔شکریہ

بارش کے بعد ہوا ميں پانی کے تیرتے ہوئے ننھے ننھے کروی (گیند نما Spherical) قطروں پر جب سورج کی سفید روشنی پڑتی ہے تو سات رنگوں میں بکھر جاتی ہے جسے دھنک یا۔۔۔ مزید پڑھیں

آج ہم وٹامن ای کے ان حیران کن فوائد اوراستعمالات کے بارے میں بتائیں گے، جن کے بارے میں آپ نے کبھی بھی نہیں سناہوگا۔وٹامن ای کومختلف اشیاے کے ساتھ۔۔۔ مزید پڑھیں

ملک و ملت کا نام روشن کرنے والوں کا نام روشن رکھنا زندہ قوموں کا شیوہ رہا ہے۔ ہم بحیثیتِ پاکستانی اپنے فرزندِ ملت ڈاکٹر عبدالسلام کی کاوشوں کو سراہتے ہیں۔۔۔ مزید پڑھیں

کچھ کھانے ایسے ہیں جنہیں دوسرے کھانوں میں شامل کر کے کھایا جائے تو وہ ہمارے نظام انہظام پر اچھے اثرات مرتب نہیں کرتے اور بعض دفعہ ہمیں بیمار بھی کر دیتے ہیں۔۔۔ مزید پڑھیں

دنیا میں چند عمارات ایسی بھی ہیں جن کی تعمیر پر ایک شاہانہ بجٹ خرچ کیا گیا ہے جس کے ساتھ ہی انہیں دنیا کی مہنگی ترین عمارات ہونے کا اعزاز حاصل ہوچکا ہے۔۔۔ مزید پڑھیں

ایک دن نائی نے بادشاہ سے عرض کیا،حضور آپ وزیر کی جگہ مجھے وزیر کیوں نہیں بنا دیتے۔ بادشاہ نے مسکرا کر حجام کی طرف دیکھا اور اس سے کہا،ٹھیک ہے لیکن پہلے تم۔۔۔ مزید پڑھیں

یہ تاریخ کا پہلا واقعہ تھا کہ کسی ہندو کی چتا کو آگ نہ لگنے کی وجہ سے شمشان گھاٹ میں ہی دفنا دیا گیا ۔ایک ہندو احترام قران میں اس دنیا کی آگ سے محفوظ رہا ہم اس کتاب پر۔۔۔ مزید پڑھیں

یہ ایک مفلس غریب الوطن کے عزم و ہمت کی انوکھی داستان ہے جو ثابت کرتی ہے کہ آپ ڈٹے رہیں، محنت کرتے رہیں تو بالآخر کامیابی آپ کے قدم چومتی ہے۔۔۔ مزید پڑھیں

برہنہ حالت میں کبھی خود کو آئینے میں مت دیکھیں کیونکہ اس طرح جن آپ پر عاشق ہو سکتے ہیں اور آپ کے ساتھ تعلق کی کوشش کر سکتے ہیں۔ ایسی صورت میں اور کوئی بھی ۔۔۔ مزید پڑھیں

جوزف سوان اور تھامس ایڈیسن نے 1870 کی دہائی میں بجلی کا بلب بنایا۔ اس سے چند برس بعد ایڈیسن نے بجلی بنانے کے سٹیشن نیویارک میں پرل سٹریٹ اور لندن میں ۔۔۔ مزید پڑھیں

انسان نے سونا 8,000 سال قبل دریافت کر لیا تھا۔ 750 سال قبل از مسیح تک یعنی سونے کی دریافت کے سوا پانچ ہزار سال بعد تک انسان صرف سات دھاتوں سے واقف تھا ۔۔۔ مزید پڑھیں

سورہ کہف کی تلاوت فتنے دجال سے نجات کا باعث ہے ۔ خروج دجال قیامت کی بڑی نشانیوں میں سے ایک ہے اور فتنہ دجال زمانے کے شروفتن میں سب سے بڑا فتنہ ہے مکہ مکرمہ۔۔۔ مزید پڑھیں